امریکا میں بستر کے نیچے چُھپائے گئے 2 کروڑ ڈالر برآمد

امریکا کی مشرقی ریاست میساچوسٹس میں حکام نے ایک فلیٹ سے 2 کروڑ ڈالر برآمد کر لیے جو بستر کے نیچے چھپائے گئے تھے۔ میسا چوسٹس کے اٹارنی جنرل کے دفتر کے مطابق مذکورہ رقم پیر کے روز بوسٹن کے قریب ویسٹ برو سے ملی۔ دفتر کی جانب سے برآمد ہونے والی رقم کی ایک تصویر بھی ٹوئیٹ کی گئی ہے۔
یہ رقم وسیع پیمانے پر کیے جانے والے فراڈ کی ایک کارروائی کا حصہ ہے جس کے متعلق تحقیقات کا آغاز 2014 کے شروع میں کیا گیا تھا۔
فراڈ کی کارروائی کی منصوبہ بندی کرنے والے افراد ” ٹیلیکس فری” نامی ایک کمپنی کے ذریعے دنیا بھر کے لوگوں سے رقم اینٹھا کرتے تھے۔ کمپنی کے ایک بانی رکن جيمس ميريل نے گزشتہ برس اس لوٹ مار کا سلسلہ روک کر اپنے جرم کا اعتراف کر لیا تھا جب کہ ایک دوسرا بانی رکن کارلوس وینزلر امریکا سے فرار ہو کر برازیل میں اپنے آبائی علاقے چلا گیا تھا۔
بستر کے نیچے چھپائی گئی رقم وینزلر کے فلیٹ سے برآمد کی گئی۔

تبصرے

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں