ایران نے پوکے مون گو پر پابندی لگا دی

ایرانی حکام کا کہنا ہے کہ غیر واضح ’سکیورٹی خدشات‘ کی بنا پر انھوں نے ملک میں مقبول گیم پوکے مون گو پر پابندی عائد کر دی ہے۔

سمارٹ فونز پر کھیلے جانے والی اس گیم پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ ’ہائی کونسل آف ورچول سپیسز‘ کی جانب سے کیا گیا جو ملک میں آن لائن سرگرمیوں کی نگرانی کا ادارہ ہے۔

ایران کے علاوہ دیگر ممالک نے پوکے مون سے متعلق سکیورٹی خدشات ظاہر کیے ہیں۔

لیکن ایران گیم پر پابندی عائد کرنے والا پہلا ملک ہے۔

پوکے مون گو کھلاڑیوں کو دنیا کے اصلی مقامات میں جا کر ورچول ریئلیٹی کے ذریعے کارٹون جنات پکڑنے کی گیم ہے۔

ایران میں انٹرنیٹ کے استعمال پر پابندیاں عائد ہونے کے باوجود ملک میں سوشل میڈیا استعمال کرنے والے اس گیم کے بارے میں گفتگو کر رہے ہیں۔

گذشتہ ماہ آنے والی اطلاعات کے مطابق ایرانی حکام گیم پر پابندی عائد کرنے سے پہلے پوکے مون کے تخلیق کاروں کے ساتھ تعاون کرنا چاہتے تھے۔

ایک اعلیٰ سعودی عالم کا کہنا ہے کہ پوکے مون گو سے پہلے جاری ہونے والی پوکے مون کی ایک کارڈ گیم پر لگایا گیا فتویٰ اس گیم پر بھی لاگو ہے۔

تبصرے

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں