خان محمد صدیق خان مرحوم

5766ffc2a8299
تحریر: ڈاکٹر آصف جہانگیر خان
خان محمد صدیق خان جوکہ گزشتہ چند ماہ پہلے وفات پاگئے ہیں، ٹیکسلا سے پنجاب اسمبلی کے ممبر تھے۔
محمد حیات خان کے بیٹوں محمد سرور خان اور محمد صدیق خان نے سیاست کے میدان میں بہت نام کمایا ہے۔پنڈ نوشہری سے تعلق رکھنے والے خانوادے کے ان دو بھائیوں نے بلدیاتی انتخابات سے اپنی سیاست کا آغاز کیا۔
محمد سرور خان اسی کی دہائی میں سب سے پہلے ڈسٹرکٹ کونسل راولپنڈی کے بنے۔یہ ان کی سیاست کا آغاز تھا۔
محمد سرور خان نہایت دلعزیز ہستی، ہر ایک کو اپنا بنانے والے اور دل کو موہ لینے والی ہستی ہیں۔لوگوں کے بہت قریب ہیں۔اور اُن کے دکھ درد کا حصہ بنتے ہیں۔1985ء کے الیکشن میں ممبر پنجاب اسمبلی منتخب ہوئے۔ اس وقت میاں محمد نواز شریف وزیر اعلی پنجاب تھے۔محمد سرور خان اپوزیشن ممبر تھے۔اُن کے ساتھ کرنل یامین اور چوہدری محمد اسلم آف چکری اکھٹے ہوتے تھے۔مخدوم زادہ حسن محمود اس وقت کی اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر تھے۔
سرور خان پھر اگلے الیکشن میں بھی کامیاب ہوکر صوبائی وزیر صحت کے طور پر کام کرتے رہے۔پھر قومی اسمبلی کے ممبر بنے اور وفاقی وزیر کے طور پر بھی کام کیا۔
جنرل مشرف کے دور اقتدار میں جب بلدیاتی اداروں کو متعارف کرایا گیا تو مرحوم صدیق خان ٹیکسلا تحصیل کے 2002-10ء تک تحصیل ناظم رہے۔ اور ڈسٹرکٹ کونسل کے بھی ممبر رہے۔
2013ء کے جنرل الیکشن میں پنجاب اسمبلی کے ممبر منتخب ہوے اور اس دوران انڈیا، انگلینڈم سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات تک کے سفر کیے۔
محمد سرور خان اور محمد صدیق خان کے تیسرے بھائی شفیق خان بھی ممبر پنجاب اسمبلی رہے۔
ان سب بھائیوں کی سب سے بڑی خوبی اِن کا عوامی رویہ ہے۔لوگوں کے دلوں کے بہت قریب رہے ہیں۔
سارے بھائی رشتے ناطے نبھانے والے لوگ ہیں۔ان کے قطبال، گڑھی حسو خان اور فتح جنگ میں قریبی عزیز داری ہے اور رشتے نبھانے میں یہ کمال کی ہستیاں ہیں۔ ایک نظر میں پہچاننے والے اور دوسروں کی مدد کے لیے ہرد م مستعد رہتے ہیں۔
اللہ پاک مرحوم صدیق خان کو جنت الفردوس میں جگہ نصیب فرمائے۔ آمین
tehk-504x330
14522749_1865975457021969_5266050203513227351_n

تبصرے

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں