دعا-اہمیت اور مانگننے کا طریقہ

دعا مانگنے سے پہلے مندرجہ ذیل باتیں ذہن میں رکھیں!
آپ کا مخلص ہونا بہت ضروری ہے اور یہی توحید (یعنی اللہ سبحانہُ وتعالیٰ حاجت روا،مشکل کشا،سننے والا) ہے۔
دُعا کیا ہے؟
دُعا ایک ہتھیار، واسطہ اور ذریعہ ہے،اور اسے استعمال کرنے والے کو اس کی طاقت کا خوب اندازہ بھی ہو اوراُس پر یقین بھی ہو،اگر اس ہتھیار کو صحیح طریقے سے استعمال کیا جائے توبندہ / بندی اپنے تمام کام اس ہتھیار سے کرسکتا /سکتی ہے۔یہ مومن کیلئےتلوار،بم،ڈھال،سُکھ،چین،صحت،تندرستی اور ہر قسم کے نقصان اور غم سے نجات اور سب کچھ ہے۔ بھکاری بن کر دعا مانگیں،اور یہ سمجھ لیں کہ اللہ کے خزانے لا محدود ہیں، اللہ کو کسی کی پرواہ نہیں، اللہ کے دربار کے علاوہ کوئی دربار نہیں۔اللہ کی شان اور اُس کی قدرت کے مطابق مانگیں۔
دُعا کا قبول ہونا
دُعا کی مقبولیت کے لیے ضروری ہے کہ کثرت سے استغفار (استغفراللہ ربی من کل ذنب واتوب الیہ)کی جائےاور گناہوں سے بچنے کی کوشش کی جائے۔
دعا شروع کریں
بسم اللہ الرحمٰن الرحیم پڑھیں، تین مرتبہ درود ابراہیمی شریف پڑھیں۔یہ3آیات(جو کہ اسم اعظم ہیں) ایک دفعہ پڑھیں، لا الہ الا انت سبحانک انی کنت من الظالمین، الم اللہ لا الہ الا ھو الحی القیوم،والھکم الٰہ واحد لا اللہ الا ھوالرحمٰن الرحیم
اپنے گناہوں (اللہ کی نا فرمانیوں) کو یاد کریں اور اقرار کریں: یا اللہ میں گنہگار ہوں ،نافرمان ہوں ،ناشکرا ہوں ، کمزور ہوں ،مدد کا محتاج ہوں ،بھکاری ہوں ،ناچییز ہوں ،محکوم ہوں ،غلام ہوں،میرا یقین کامل نہیں،میری عبادات میں اخلاص نہیں،
اللہ جل جلا لہ کی تعریف کریں
یا اللہ تو رحیم ، کریم،غفور، صمد، حاجت روا، مشکل کشا، سمیع المناجات، رافع الحاجات،مسبب الاسباب،غنی، بادشاہ، رزاق، خلاق ،رب،تندرستی دینے والا،بیماریاں دور کرنے والا،تیرے دربار کے علاوہ کوئی اور دربار نہیں
اللہ جل جلا لہ کی اپنے اوپر نعمتوں کو گنیں
جیسے بھوک کا لگنا، پیاس کا لگنا، ٹھنڈا پانی میسر ہونا،کھانا کھانا،کھانے کا ہضم ہونا،دیکھنا، سننا،سوچنا،اپنی مرضی سے چلنا پھرنا،باتیں کرنا،ہاتھوں سے چیزوں کو پکڑنا،صحت کا ٹھیک ہونا،مالدار ہونا وغیرہ وغیرہ.
اللہ جل جلا لہ کے سامنے رو پڑیں۔دنیاور آخرت کی کامیابیاں اورتمام کی تمام مصلحتیں ضرور مانگیں.خاتمہ بلخیراورکلمہ اورایمان کی حالت میں موت مانگیں.ایسے مانگیں جیسے بھکاری مانگتے ہیں اور اللہ کے دربار کو نہ چھوڑنا جب تک حاجت پوری نہ ہو جائے۔

نوٹ: اللہ جل جلا لہ غیرت مند ہیں اور اپنے آپ کے علاوہ مانگنے والے پر ناراض ہوتے ہیں.

اللہ جل جلا لہ ہر مومن / مومنہ کی دعا کے ذریعے تمام جائز حاجات کو پورا فرمائیں.آمین ثم آمین

تبصرے

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں