فتح‌جنگ: دھرنا میں‌شرکت سے روکنے کے لیے تحریک انصاف و مسلم لیگ ق کے عہدریدران گرفتار

فتح‌جنگ: 2 نومبر کو تحریک انصاف کی دھرنا کال کو ناکام بنانے کے لیے پورے ملک میں‌ سیاسی جماعتوں‌کے کارکنان کے خلاف کریک ڈاون شروع کردیا گیا.
اسلام آباد و راولپنڈی سمیت دیگر شہروں‌سے جماعتوں‌کو عہدیدران کو گرفتار کیا جارہا ہے.
فتح‌جنگ میں‌بھی پولیس نے کاروائی کرتے ہوئے مسلم لیگ ق کے رہنماءنصرت خآن ماجھیا، سردار فرحت عباس عرف پھتی خان اور تحریک انصاف کے تحصیل عہدیدار و کونسلر زبیر خان کو گذشتہ شب گرفتار کرلیا ہے.
شہر کی سیاسی جماعتوں کے عہدیدران نے ان گرفتاریوں‌کی مذمت کی ہے .
پولیس نے ضلع اٹک میں‌ مختلف جماعتوں‌کے 41 عہدیدران کو حراست میں‌لے لیا ہے. جبکہ دھرنا میں‌شرکت سے روکنے کے لیے مسافر گاڑیوں‌کی پکڑ دھکڑ بھی شروع کردی گئ ہے.
پولیس کی گرفتاریوں‌پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے میجر طاہر صادق نے سخت اجتجاج کیا اور کہا کہ حکومتی ادارے شاہ سے زیادہ شاہ بننے کی کوشش نہ کریں اور سیاسی رہنماوں اور کارکنوں‌کو گرفتار کرنے سے گریز کریں. ہم گرفتاریوں‌اور حکومتی اوچھے ہتھکنڈوں‌سے خوفزدہ ہونے والے نہیں.
انہو‌ں‌نے مزید کہا کہ گرفتاریوں‌سے ظاہر ہوتا ہے کہ حکمران 2 نومبر کی دھرنا کال سے خوفزدہ ہوچکے ہیں

تبصرے

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں