میونپسل کمیٹی فتح‌جنگ انتخابات، چیئرمین امیدواران چاروں دوست و کلاس فیلوز آمنے سامنے

فتح جنگ(صداقت محمود مٹھو سے)
میونسپل کمیٹی کے انتخابات چیئرمین کے چاروں امیدوار کلاس فیلوز ہیں ایک ساتھ رہنے کا وعدہ وفا نہ ہو سکا 2جگری دوست بھی کرسی کیلئے آمنے سامنے آگئے عابد عزیز ایڈووکیٹ کے ہمراہ سیاست کا آغاز کرنے اور انتخابی مہم چلانے والے ملک عابد داؤد مسلم لیگ(ن) کی جانب سے چیئرمین کے امیدوار بن گئے امیدوار برائے چیئرمین تحریک انصاف کے قاضی شاہد محمود اور (ن) لیگ کے ملک بشیر حیات بھی ایک کلاس میں پڑھتے رہے ہیں فتح جنگ کے معروف بزنس مین ملک عابد داؤدنے وارڈ نمبر1جبکہ سابق تحصیل ناظم سردار افتخار احمد کے بھائی عابد عزیز ایڈووکیٹ نے وارڈ نمبر2سے الیکشن لڑا دونوں امیدوار پور انتخابی مہم میں ایک ساتھ رہے عابد داؤد نے 1190ووٹ لے کر 12کونسلرز میں پہلی پوزیشن حاصل کی ملک عابد داؤد اور عابد عزیز ایڈووکیٹ کی انتخابی میں سجادہ نشین دربار پیر احمد شاہ فتح جنگ پیر سید قاسم شاہ کا مرکزی کردار رہا ہے

الیکشن جیتنے کے بعد بھی تقریباً ایک سال تک عابد عزیز ایڈووکیٹ اور ملک عابد داؤد ایک ساتھ نظر آئے مگر اچانک مخصوص نشستوں کے انتخابات سے ایک روز قبل صورتحال اس وقت اچانک تبدیل ہو گئی جب ملک عابد داؤد اور کونسلر ملک بلال عباس نے پیپلز پارٹی کے ریاض خان بالڑہ کے زریعے مسلم لیگ(ن) کی حمایت کر دی میجر گروپ چھوڑ کر جانے والے ملک عابد داؤد اور بلال عباس کو بالترتیب چیئرمین اور وائس چیئرمین کے عہدہ کی آفر کی گئی اور (ن) لیگ کے رہنما آصف علی ملک ایڈووکیٹ نے اسی وعدہ کے مطابق دونوں کو مسلم لیگ(ن) کا امیدوار بنا دیا انکے کورنگ امیدوار ملک بشیر حیات اور محمد سفیر ملک کے تائید اور تجویز کنندہ ملک آصف بشیر اور علی ایوب بھی چیئرمین کے عہدہ کیلئے آزاد امیدوار بن جس پر ملک بشیر حیات کو کاغذات واپس لینا پڑے جس کے باعث مسلم لیگ(ن) کے اندر کھینچا تانی نے حکومتی پارٹی کیلئے مشکلات پیدا کر دیں

مسلم لیگ(ن) کی طرف سے ملک عابد داؤد اور میجر گروپ کی طرف سے عابد عزیز ایڈووکیٹ کے حتمی امیدوار ہونے کا امکان ہے تاہم کاغذات نامزدگی واپس لینے کی آخری تاریخ تک کچھ بھی قیاس آرائی قبل از وقت ہو گی پارٹی قیادت کے فیصلہ کے برعکس تحریک انصاف کے قاضی شاہد محمود ابتدا میں مسلم لیگ(ن) کے اتحادی تھے اور اس بات کا دعویٰ کر رہے تھے کہ آصف علی ملک ایڈووکیٹ انہیں چیئرمین کا امیدوار نامزد کریں گے حالات تبدیل ہوئے تو قاضی شاہد محمود دلبرداشتہ ہو کر میجر گروپ کے ساتھ چلے گئے اور وہاں پر امیدوار بن گئے انکے الیکشن لڑنے کے امکانات بھی ہیں (ن) لیگ کے ملک آصف بشیرنے ایم سی فتح جنگ کے چیئرمین کے عہدہ کیلئے آزاد حیثیت میں کاغذات جمع کروا رکھے ہیں اور چیئرمین کا حتمی فیصلہ کرنے والے ریاض خان بالڑہ اور آصف علی ملک ایڈووکیٹ کے انتہائی قریبی عزیز ہیں۔دونوں دھڑوں میں کانٹے دار مقابلہ متوقع ہے۔

تبصرے

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں