16 سالہ پاکستانی نژاد کروڑپتی

برطانیہ میں مقیم ایک پاکستانی نژاد 16 سالہ طالب علم نے کم عمری کے باوجود اپنی ذہانت اور محنت سے ایک ایسا منصوبہ تیار کیا جس نے اسے کروڑ پتی بنا دیا۔
العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق پاکستانی نژاد محمد علی کی شہرت کو چار چاند لگانے والی اس کی وہ ویب سائیٹ ہے جس کی مقبولیت نے اسے شہرت کے ساتھ ناقابل یقین دولت کا بھی مالک بنا دیا۔ اگرچہ اس نے امریکی سرمایہ کاروں کے ایک گروپ کی جانب سے ویب سائیٹ کے بدلے میں 62 لاکھ ڈالر کے مساوی رقم کی پیش کش ٹھکرا دی۔
رپورٹ کے مطابق محمد نے کچھ عرصہ قبل اپنے بیڈ روم میں ایک ایسی ویب سائیٹ کو ڈیزائن کرنے کے بارے میں سوچا۔ اس نے اپنی ویب سائیٹ کے ذریعے لوگوں کو پیسے خرچ کرنے کے بجائے انہیں بچانے کا آئیڈیا دیا اور یہ آئیڈیا ہزاروں افراد کو پسند آیا جس کے نتیجے میں اس کی تیار کردہ ویب سائیٹ تیزی کے ساتھ مقبولیت کی بلندیوں کو چھوتی چلی گئی۔
ویب سائیٹ کی غیرمعمولی مقبولیت کے بعد امریکا کے سرمایہ کاروں نے محمد علی کو اس کی ویب سائیٹ کے بدلے میں 62 لاکھ امریکی ڈالرادا کرنے کی پیش کش کی۔ ان کی جانب سے یہ پیش کش بھی کی گئی محمد علی ویب سائیٹ ان کے حوالے کرنے کے بعد بھی اس کے ساتھ وابستہ رہے مگر اس نے امریکی دولت مندوں کی طرف سے پیش کش ٹھکرادی۔ جب علی کی طرف سے ویب سائیٹ کے بدلے بھاری رقم کی آفر ٹھکرا دی گئی تو انہوں نے اسے کہا کہ وہ مستقبل میں اسے مزید خطیر رقم فراہم کریں گے۔
برطانوی اخبار’ڈیلی میل‘ کے مطابق پاکستانی نژاد لڑکے کا یہ پہلا کارنامہ نہیں بلکہ وہ 12 سال کی عمر میں ایک تجارتی کمپنی بھی بنا چکا ہے جس سے اس نے 40 ہزار آسٹریلوی پاؤنڈ کمائے تھے۔ اس نے اس رقم سے ایک آن لائن گیم تیار کی جسے فروخت کرکے اس نے مزید ہزاروں ڈالر کمائے۔ اس کےبعد وہ اسمارٹ فون کےٹریڈ مارکیٹ اور سرمایہ کاری کے تحفظ سےمتعلق پروگرامنگ کی جانب متوجہ ہوا اور آخر کار اس نے ایک ویب سائیٹ لانچ کی جس میں لوگوں کو پیسے بچانے کے اصولوں سے آگاہ کرنا شروع کیا۔
محمد علی کا کہنا ہے کہ کم عمری میں اس نے کئی کامیاب کاروباری منصوبے شروع کیے ہیں مگر اس کا سفر یہاں پرہی ختم نہیں ہو رہا ہے۔ وہ ایک اور ویب سائیٹ کی تیاری کے بارے میں غورکرہا ہے جس میں آن لائن شاپنگ سینٹرز میں اشیاء کی قیمتوں کا تقابل کرکے اس کی تفصیلات گاہکوں کو فراہم کی جائیں گی۔ اس کے اس پروجیکٹ میں ایک ساٹھ سالہ برطانوی کاروباری شخصیت بھی شریک ہیں۔

تبصرے

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں